سندہ بھر میں گرج چمک کیساتھ بارش کا امکان، اربن فلڈنگ کا خطرہ

ڈائریکٹر محکمہ موسمیات کا کہنا ہے کہ خلیج بنگال میں 6 ستمبر تک ایک اور کم دباؤ بن سکتا ہے جس کی وجہ سے 8 اور 9 ستمبر تک سندھ میں مون سون کا ایک اور طوفان آسکتا ہے

کراچی: سندھ کے مختلف شہروں میں گرج چمک کے ساتھ بارش کی پیش گوئی کی گئی ہے جس کے باعث نشیبی علاقوں میں شہری سیلاب کا خطرہ ہے۔

ڈائریکٹر محکمہ موسمیات سردار سرفراز کے مطابق مشرقی سندھ میں کم دباؤ جنوب کی طرف بڑھ رہا ہے جس کی وجہ سے یکم سے 3 ستمبر تک سندھ اور پنجاب کے جنوبی علاقوں میں بارش کا امکان ہے۔

یہ بھی پڑھیے: پینے کے پانی کے حوالے سے چشم کشا انکشافات، 62 فیصد پانی مضر صحت قرار

"کم پریشر کا علاقہ کراچی کے قریب جنوب سے مشرق کی طرف پھیل رہا ہے لیکن کم پریشر کی رفتار بہت سست ہے، آج دوپہر گرج چمک کے ساتھ بارش کا امکان ہے جس کی وجہ سے 2 اور 3 ستمبر کو اچھی بارش ہوگی۔ کراچی شہر میں گرج چمک کے ساتھ بارش کا امکان 4 ستمبر تک ہے۔

انہوں نے کہا کہ سندھ کے مختلف شہروں میں شدید اور درمیانی بارش کا امکان ہے جس کی وجہ سے کراچی ، ٹھٹھہ اور بدین کے نشیبی علاقوں میں شہری سیلاب کا خطرہ ہے۔ ڈائریکٹر محکمہ موسمیات کا کہنا ہے کہ خلیج بنگال میں 6 ستمبر تک ایک اور کم دباؤ بن سکتا ہے جس کی وجہ سے 8 اور 9 ستمبر تک سندھ میں مون سون کا ایک اور طوفان آسکتا ہے۔

کراچی ائیرپورٹ پر ہائی الرٹ

دوسری جانب سول ایوی ایشن اتھارٹی نے بارش سے نمٹنے کے لیے کراچی ائیرپورٹ پر الرٹ جاری کیا ہے اور ہوائی اڈے کے اندر طیاروں کو محفوظ جگہ پر پارک کرنے کی ہدایت کی ہے۔

سول ایوی ایشن اتھارٹی کی جانب سے جاری کردہ الرٹ میں کہا گیا ہے کہ ہوائی جہاز کے ساتھ وزن لگایا جائے تاکہ طیارہ طوفانی ہواؤں کی وجہ سے دوسرے طیاروں سے ٹکرانے سے محفوظ رہے۔

سی اے اے نے طیارے کی محفوظ لینڈنگ اور ٹیک آف کے لیے برڈ شوٹرز کی تعیناتی کا بھی حکم دیا ہے۔

مزید خبریں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button