سندھ کے سوا ملک بھر میں تمام تعلیمی ادارے کھولنے کا فیصلہ

صوبہ سندھ کے علاوہ تمام صوبوں میں امتحانات شیڈول کے مطابق ہوں گے: شفقت محمود

سلمان احمد

اسلام آباد: سندھ کے علاوہ ملک بھر میں اسکولوں سمیت تمام تعلیمی ادارے بتدریج کھولنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔

ملک بھر میں کورونا کی صورتحال کا جائزہ لینے کے لیے وفاقی وزیر شفقت محمود کی صدارت میں بین الصوبائی وزیر تعلیم کا اجلاس منعقد ہوا۔ میٹنگ کے بعد ایک پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ تمام سرکاری اور نجی اسکولوں کو ایک دن میں 50 فیصد طلباء کو کال کرنے کی اجازت ہوگی۔

شفقت محمود نے کہا کہ سندھ کے علاوہ تمام صوبوں میں امتحانات شیڈول کے مطابق ہوں گے۔ امتحانات میں لازمی مضامین میں اضافی 5٪ نمبر دیئے جائیں گے۔ انہوں نے کہا کہ اجلاس میں صوبائی وزرائے تعلیم سے درخواست کی گئی کہ وہ یونیورسٹی کے طلباء اور اساتذہ کو ویکسین لگوائیؐ جبکہ اسکول کے عملے کی ویکسینیشن بھی ضروری ہے۔

یہ بھی پڑھیے: کورونا وائرس کی بھارتی قسم ڈیلٹا نے عالمی معیشت کا کباڑہ نکال دیا

انہوں نے کہا کہ 25 اگست کو کورونا صورتحال کا جائزہ لیا جائے گا۔ ہم بچوں کی صحت اور تعلیم کا خیال رکھنے کی پوری کوشش کر رہے ہیں۔

دوسری جانب پنجاب کے وزیر تعلیم مراد راس نے بین الصوبائی وزراء تعلیم کے اجلاس میں شرکت کے بعد کہا کہ جاری کردہ احکامات کے مطابق صوبے بھر کے سکول کھلے رہیں گے۔

انہوں نے کہا کہ تمام سرکاری اور نجی اسکولوں کو ایک دن میں 50 فیصد طلباء کو کال کرنے کی اجازت ہوگی۔ مراد راس نے کہا کہ کورونا ایس او پیز اور ویکسینیشن کے نفاذ کے بغیر وبائی مرض پر قابو نہیں پایا جا سکتا۔

مزید خبریں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button