عیدالاضحی کے موقع پر گھروں کے اندر یا قریب قربانی پر پابندی عائد

محکمہ داخلہ سندھ نے کمشنرز، ڈپٹی کمشنرز اور پولیس کو ایس او پیز کی خلاف ورزی کرنے والوں کے خلاف کارروائی کی ہدایت کی ہے

کراچی: حکومت سندھ نے عیدالاضحی کے موقع پر گھروں کے اندر یا قریب قربانیوں پر پابندی عائد کردی ہے۔

محکمہ داخلہ سندھ کی جانب سے جاری ایک نوٹیفکیشن میں کہا گیا ہے کہ کورونا وائرس میں اضافے کی وجہ سے شہری رہائشی علاقوں میں قربانی کی اجازت نہیں ہے۔

جانوروں کی قربانی کے ؒلئے کھلے میدان کا انتخاب کیا جانا چاہئے اور جانوروں کی قربانی دیتے وقت کوئی اجتماع نہیں ہونا چاہئے۔ محکمہ داخلہ سندھ نے کمشنرز، ڈپٹی کمشنرز اور پولیس کو ایس او پیز کی خلاف ورزی کرنے والوں کے خلاف کارروائی کی ہدایت کی ہے۔

یہ بھی پڑھیے: سعودی عرب نے 25 جولائی سے عمرے کی اجازت دینے کا اعلان کردیا

نوٹیفکیشن میں کہا گیا ہے کہ نماز عید کے اجتماعات بھی کھلی جگہ پر ہوں گے اور مختلف اوقات میں ایک سے زیادہ نماز عید اجتماع ایک ہی جگہ پر منعقد ہوں گے۔

نمازعید کیلئے آنے والوں کو تھرمل سکینر سے گزارا جائے، نماز کے دوران سماجی فاصلہ برقرار رکھا جائے اور عید کے اجتماعات میں بیمار افراد، بچوں اور بزرگ شہریوں کو شرکت نہ کرنے دی جائے۔

محکمہ داخلہ سندھ نے کہا ہے کہ نماز عید ادا کرنے والے افراد کو ماسک پہننے اور شہریوں کو عید کی نماز کے بعد ہاتھ ملانے اور گلے ملنے سے گریز کرنا چاہئے۔

مزید خبریں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button